رابطہ کمیٹی کے سابق رکن اور تحریک کے سینئر کارکن اشرف نور کے گھر پر پولیس اور سادہ لباس میں ملبوس اہلکاروں کے چھاپے کی شدید مذمت کرتے ہیں،رابطہ کمیٹی ایم کیوایم

ایم کیوایم کی رابطہ کمیٹی نے ایم کیوایم کی رابطہ کمیٹی کے سابق رکن اور تحریک کے سینئرکارکن اشرف نور کے گھر پر پولیس اورسادہ لباس میں ملبوس اہلکاروں کے چھاپے کی شدید مذمت کی ہے ۔ اپنے بیان میں رابطہ کمیٹی نے کہا کہ پولیس،سی آئی اے، رینجرز اور اس سے ملحق ادارے اشرف نور اور ان کے اہل خانہ کو مسلسل تنگ کر رہے ہیں، اشرف نور کو بار بار گرفتار کیا جاتا ہے، ان کے اہل خانہ سے بھاری رقوم کا مطالبہ کیا جاتا ہے۔ کچھ عرصہ قبل بھی پولیس اور سادہ لباس اہلکاروں نے اشرف نورکے گھر پر چھاپے مار کر ان کے والد کو حراست میں لیا اور ان سے بھاری رقم لی،بعد میں اشرف نور کو بھی گرفتار کر کے لاپتہ کیا گیا، اشرف نور کئی ماہ کی قید کے بعد چند روز پہلے ہی رہا ہو کر آئے ہیں اور اب پھر ان کے گھروالوں کو تنگ کیا جارہا ہے، گزشتہ شب ایک بار پھر پولیس اور سی آئی اے کے سادہ لباس اہلکاروں نے شاہ فیصل کالونی میں اشرف نور کے گھرپر چھاپہ مارا، ان کی اہلیہ اور بوڑھے والد سے بدتمیزی کی ۔ رابطہ کمیٹی نے اشرف نور کے گھر پر چھاپے کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور حکومت سندھ سے مطالبہ کیا کہ اشرف نور کے گھرپرچھاپے بند کرائے جائیں اوراس بات کی تحقیقات کی جائے کہ اشرف نور کے گھرپر بلاجوازچھاپے کون ماررہاہے اوریہ چھاپے کس لئے مارے جارہے ہیں ۔