قائد تحریک جناب الطاف حسین نے کئی سال قبل پاکستان میں طالبانائزیشن اور داعش کے خطرات سے پوری قوم کو آگاہ کردیا تھا۔ ڈاکٹر سلیم دانش

متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی کے رکن اور ایم کیو ایم برطانیہ کے آرگنائزر ڈاکٹر سلیم دانش نے کہا ہے کہ کئی سال قبل قائد تحریک جناب الطاف حسین نے پاکستان میں طالبانائزیشن اور داعش کے خطرات سے پوری قوم کو آگاہ کردیا تھا لیکن بدقسمتی سے نہ صرف قائد تحریک جناب الطاف حسین کے خدشات پر توجہ نہیں دی گئی بلکہ انہیں تنقید کا نشانہ بنایا گیا اور آج طالبان کے بعد بین الاقوامی دہشت گرد تنظیم داعش بھی ملک کے چپے چپے میں پھیل چکی ہے۔یہ بات انہوں نے ایم کیو ایم برطانیہ ٹوٹنگ یونٹ اور ویمبلے یونٹ کے علیحدہ علیحدہ جنرل ورکرز اجلاسوں سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ انہوں نے کہا کہ ملک کی ناعاقبت اندیش لیڈرشپ کی بدولت بین الاقوامی دہشت گرد تنظیم داعش کے کارندے ملک کے اعلیٰ تعلیمی اداروں کے ساتھ ساتھ اہم سرکاری دفاتر میں گھس چکے ہیں جہاں وہ مذہب کے نام پرسادہ لوح عوام کی برین واشنگ کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ مذہبی انتہا پسندی اور دہشت گردی کی عفریت پر قابو پانے کے لئے ضروری ہے کہ قائد تحریک جناب الطاف حسین کے بتائے گئے حقائق کی روشنی میں ایک مربوط طریقے سے پور ے ملک سے مذہبی دہشت گرد اور ان کے سہولت کاروں کو گرفتار کر کے آئین و قانون کے مطابق کاروائی کی جائے۔اس موقع پر ایم کیو ایم برطانیہ کے جوائنٹ آرگنائزر سہیل خانزادہ ، سیکریٹری جنرل منظور احمد ، اراکین آرگنائزنگ کمیٹی ریحان عباسی ، ہاشم اعظم، شفیق احمد اور شمائیل بھی موجود تھے۔