چیف جسٹس ثاقب نثار کی جانب سے پاکستان کوارٹرز کے مکینوں کو ناجائز قابضین قرار دینا مہاجر دشمنی ہے ۔ ڈاکٹر ندیم احسان

ایم کیوایم کے کنوینر ڈاکٹر ندیم احسان نے سپریم کورٹ کے چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی جانب سے پاکستان کوارٹرز کے مکینوں کو ناجائز قابضین قرار دینے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے اور اسے کھلی مہاجردشمنی قرار دیا ہے ۔ اپنے ایک بیان میں ڈاکٹرندیم احسان نے کہا کہ پاکستان کوارٹرز، مارٹن کوارٹرز، کلیٹن کوارٹرز اور جہانگیر روڈ میں رہنے والے مہاجر گزشتہ 50، 60 برسوں سے قانونی طورپر وہاں آباد ہیں ، جنہوں نے برسوں پاکستان کی خدمت کی اور ماضی کی حکومتوں کی جانب سے بھی ان مکینوں کومالکانہ حقوق دینے کے فیصلے اور اقدامات ہوچکے ہیں لیکن آج مخصوص مقاصد کے تحت ان ہزاروں مکینوں کو غیرقانونی قابضین قرار دے کران سے انکی چھت چھینی جارہی ہے اور ان کے گھروں سے بزور طاقت بیدخل کیا جارہا ہے۔ ڈاکٹر ندیم احسان نے کہا کہ ہونا تو یہ چاہیے تھا کہ چیف جسٹس سپریم کورٹ جسٹس میاں ثاقب نثار دو روز قبل پاکستان کوارٹرزمیں پولیس اور سرکاری اداروں کے ظالمانہ ایکشن اور مظلوم مہاجر ماؤں، بہنوں، بزرگوں اوربچوں پر گولیاں چلانے ، لاٹھیاں، شیلنگ ، واٹرکینن سے تشدد اور بربریت کا ازخود نوٹس لیتے لیکن یہ امر انتہائی افسوسناک ہے کہ چیف جسٹس ثاقب نثار پولیس کے ظالمانہ ایکشن کے خلاف عوام کے پرامن احتجاج کو ہی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے اسے لسانیت قراردے رہے ہیں۔ ڈاکٹر ندیم احسان نے کہا کہ یہ امر بھی انتہائی افسوسناک ہے کہ چیف جسٹس سپریم کورٹ پاکستان کوارٹرز کے مظلوم مہاجروں کو انصاف فراہم کرنے کے بجائے انہیں غیر قانونی قابضین قرار دے کر ان کے گھروں سے بیدخل کرنے کی باتیں کررہے ہیں ۔ ڈاکٹر ندیم احسان نے کہا کہ کراچی میں ایک دو نہیں کئی غیرقانونی آبادیاں قائم ہیں جہاں ملک کے مختلف حصوں سے آئے ہوئے غیر قانونی قابضین نے غیر مہاجر پولیس ، رینجرز اور غیر مہاجر انتظامیہ کی معاونت اور سرکاری سرپرستی میں سرکاری ونجی زمینوں، ہاؤسنگ سوسائٹیوں اور پہاڑیوں پر قبضے کئے ہوئے ہیں اور بڑے بڑے مکانات بنالئے ہیں لیکن چیف جسٹس کو یہ غیرقانونی آبادیاں اور غیر قانونی قابضین نظر نہیں آتے اور وہ پاکستان کوارٹرز کے مکینوں کو بیدخل کرنے پر تلے ہوئے ہیں اسلئے کہ یہاں آباد خاندان مہاجر ہیں۔ ڈاکٹر ندیم احسان نے کہا کہ کیا ان مظلوم مہاجروں سے ان کی چھت چھیننے کا عمل لسانیت نہیں ہے ؟ انہوں نے مطالبہ کیاکہ پاکستان کوارٹرز، مارٹن کوارٹرز، کلیٹن کوارٹرز اورجہانگیرروڈ کے مظلوم مکینوں کوان کے گھروں سے بیدخل کرنے کے بجائے مالکانہ حقوق دیے جائیں اوران مظلوموں پر تشدد کرنے والے سفاک پولیس اہلکاروں کے خلاف کارروائی کی جائے ۔